جنسی لذت یعنی مباشرت کے دوران مرد عورت کے کون کون سے حصے چوم یا چوس سکتا

کرنے جا رہے ہیں جس کے بارے میں اکثر لوگوں کو پتہ نہیں ہوتا کیا چز ٹھیک ہے اور کیا ٹھیک نہیں ہے .جب مرد اور عورت سیکس کرتے ہیں تو ان کو اس دوران سپوٹ کی ضرورت ہوتی ہے جس سے ان کا مزہ ڈبل ہو جائے تو اس لئے لوگ ایک دوسرے کی جسم کے اعزا کا استعمال کرتے ہیں جسے کے عورت کے پستان چھاتی گردن کانوں کے پاس جس سے عورت اور زیادہ گرم ہو جاتی ہے اور مباشرت میں بہت مزہ آنے لگتا ہے

اس سے سیکس کا عمل بہت اچھا اور مزے دار

گذارتا ہے لیکن اسکے ساتھ ساتھ یہ بھی پتہ ہونا لازمی ہے کہ عورت کے جسم کا کون کون سا حصّہ چومنا چاہے اور کون سا نہیں .جس کی تفصیل آج میں آپ کو بتانے والا ہوں
پچھلی شرمگاہ اور حیض و نفا س میں جماع کرنے کے علاوہ کسی بھی لحاظ سے بیوی کے ساتھ خوش طبی کرنے میں کوئی حرج نہیں .ایسی سہی عمل میں بیوی کی زبان چوسنا بھی خوش طبی عمل ہے .
لہذا مزے کریں اور ہر طرف آگ لگا دیں

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *