سلمیٰ آغا کی بیٹی زارا خان بڑی ہو گئی ہے اور جوان ہو کر اپنی ماں کی جوانی سے بھی چار گنا زیادہ پیاری ہے۔ایسا لگتا ہے جیسے کوئی پری اتر آئی ہو تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل

میں ایک ایسے خاندان میں پیدا ہوا تھا جہاں موسیقی کی بنیاد ہے۔ میں نے گلوکاری کے راز اپنی والدہ سے سیکھے‘ آپ سلمیٰ آغا کو جانتے ہیں جنہوں نے اپنی اداکاری اور آواز کے جادو سے ہندوستان اور پاکستان میں اپنی پہچان بنائی لیکن اب اپنی بیٹی ساشا آغا کو فن کی دنیا میں خوش آمدید کہنے کے لیے تیار ہوجائیں۔ یش راج پکچرز کے بینر تلے بننے والی ان کی پہلی فلم ’اورنگزیب‘ 17 مئی کو سینما گھروں کی زینت بنے گی جب کہ اسی فلم کے لیے گایا ہوا ان کا ایک گانا ’باربیڈین‘ بھی منظر عام پر آچکا ہے

سلمیٰ آغا کی بیٹی ہونے کا بھرپور ثبوت دیتے ہوئے ساشا نے اپنی پہلی فلم میں اپنی ماں کی طرح نہ صرف اداکاری کی بلکہ آواز کا جادو بھی جگایا۔

ایک ہندوستانی فلمی ویب سائٹ Glam Shem کو انٹرویو دیتے ہوئے ساشا نے کہا، “میں ایک ایسے گھرانے میں پیدا ہوئی جہاں موسیقی کی بنیاد ہے۔ میں نے گانے کے رموز اپنی والدہ سے سیکھے ہیں اور میں اس فن کو کبھی فراموش نہیں کرنا چاہوں گا اس لیے میں فلموں میں بھی گانا جاری رکھوں گی۔

ساشا نے مزید کہا کہ موسیقی میرے خون میں شامل ہے۔ مشہور موسیقار ساجد اور واجد میرے ماموں ہیں۔ انگریزی نغمہ نگار نتاشا خان میری سوتیلی بہن ہیں۔ جگل کشور مہرا میرے دادا اور راج کپور کے چچا تھے جنہوں نے اپنے وقت کی مشہور گلوکارہ انوری بیگم سے شادی کی۔میری دادی نسرین آغا بھی اپنے وقت کی مشہور گلوکارہ تھیں۔ کہنے کا مطلب یہ ہے کہ میں اپنے خاندان کی چوتھی نسل ہوں جس کا تعلق گاگی سے ہے۔ میں ایک گانے والے گھرانے میں پیدا ہوا تھا۔ “فلم کے قریبی ذرائع نے بتایا کہ فلم کے پروڈیوسر آدتیہ چوپڑا نے ساشا کو گانے پر اصرار کیا۔ گانے کا نام ہے “تباہی”۔ جب اس نے آڈیشن میں ساشا کی آواز سنی، تب تک اس نے ساشا کی آواز میں ایک گانا ریکارڈ کرنے کا ارادہ کر لیا تھا۔

تباہی دراصل ایک کلب ٹریک ہے جس کی تصویر ساشا اور ارجن کپور پر بنائی گئی ہے۔ فلم میں ساشا اور ارجن کپور مرکزی کرداروں میں ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.