عربی شیخ کی سولہ سالہ لڑکی سے شادی

عربی شیخ کی سولہ سالہ لڑکی سے شادی

عربی شیخ جتنے بڑے بھی عمر میں چائیے بوڑھے ہی کیوں نہ ہوں لیکن وہ زیادہ سے زیادہ

شادیاں کرنا چاہتے ہیں اور ان کی پہلی چوائس کم عمر لڑکی ہوتی ہے۔

آیسا ہی ہوا سعودی عرب کے شہر دمام میں جہاں ایک ایک عرب پتی شیخ کو شادی کی تقریب میں ایک سولہ سالہ لڑکی پسند آگئی اس

کے بعد اس نے اس لڑکی کے گھر والوں کو نکاح کا بولا لیکن وہ راضی نہیں ہوئے تو عربی شیخ نے لڑکی کے عوض دس

لاکھ ریال دینے کا فیصلہ کرلیا۔ پیسہ ایسی چیز ہے جس سے دنیا کی ہر چیز خریدی جاسکتی لڑکی کے گھر والے اس رشتے کے لیے مان گے اور دونوں کی شادی ہو گئی۔شادی کی رات عربی بوڑھے نے بہت کوشش کی لیکن شادی کی رات وہ بے ہوش ہوگیا۔ لیکن لڑکی اب اس شادی سے خوش ہے کیونکہ وہ بڑھا کتنا اور جئیے گا اس کے بعد سارا پیسہ اسی کا ہوگا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.